بریکنگ نیوز

ایف اے ٹی ایف کے حوالے سے عالمی سطح پر بھارتی جھوٹ اور پروپیگنڈا بے نقاب ہوگیا

اگلے روز ایف اے ٹی ایف کے حالیہ اجلاس میں پاکستان کو مزید تین ماہ کیلئے گرے لسٹ میں رکھنے کے حوالے سے بھارتی جھوٹ اور حقائق کے خلاف پروپگنڈا ایف اے ٹی ایف کے صدر مارکس پلیئر نے عالمی میڈیا کے سامنے بے نقاب کردیا ہے۔ ایف اے ٹی ایف کے صدر کا کہنا تھا کہ سعودی عرب نے پاکستان کی مخالفت نہیں کی، اس بارے میں بھارتی میڈیا پاکستان مخالف جھوٹے پراپیگنڈے کا آلہ کار بنا رہا اور جھوٹ آلاپتا رہا۔فنانشل ایکشن ٹاسک فورس کے سالانہ اجلاس میں بھارت کے علاوہ تمام رکن ممالک نے پاکستان کی کارکردگی کی تعریف کی ۔ بھارتی میڈیا کے پراپیگنڈہ کا ایف اے ٹی ایف کے صدرنے بھارتی میڈیا کے نمائندے کو سوال کرنے پر بھرپور جواب دیتے ہوئے قوانین بارے بتایا۔بھارتی میڈیا نے دعوی کیا تھاکہ پاکستان کے آن سائٹ وزٹ کے لئے سعودی عرب، ملائیشیا، چین نے حمایت نہیں کی جبکہ حقیقت یہ ہے کہ سعودی عرب اور ملائیشیا کو پلانری کے دوران وقت کی کمی کے باعث فلور ہی نہیں ملا۔ فیٹف کے صدر مارکس پلیئر کا کہنا تھا کہ ایف اے ٹی ایف کنسلٹیشن ایک خفیہ پراسس ہے۔آن سائٹ وزٹ ہمیشہ اس وقت کیا جاتا ہے جب ایکشن پلان پر مکمل عمل درآمد ہوجائے۔ ہماری دانست میں بھارت کی طرف سے پاکستان کو گرے لسٹ سے بلیک لسٹ میں شامل کرانے پر ناکامی نے بھارت کو کھسیانہ کردیاہے۔ حالیہ چند مہینوں کے دوران عالمی سطح پر بھارت کو یکے بعد دیگرے کئی محاذوں پر ہزیمت اور ناکامی اٹھانا پڑی اور اس کی ہر چال اور سازش پاکستان کے خلاف ناکام و نامراد ثابت ہوئی ۔ بھارت نے ایڑی چوٹی کا زور لگایا تھا کہ پاکستان کوکسی طرح بلیک لسٹ میں شامل کرلیا جائے تاکہ پاکستان جو پہلے سے ہی معاشی طورپر بحران کا شکار ہے اسے مزید پریشان اور مسائل میں جھکڑا جاسکے۔ لیکن الحمد اللہ یہ صورتحال انتہائی مثبت اور پاکستان کے حق میں اہمیت کی حامل ہے کہ فیٹف کے تمام رکن ممالک نے سوائے بھارت کے پاکستان کے کردار کی حمایت کی جو بھارت کو کسی طور بھی برداشت نہ ہوئی اور جو بھارت کے پاکستان کے خلاف خبث باطن کا شاخسانہ ہے۔ یہی وجہ ہے کہ کھسیانی بلی کھمبہ نوچے کے مصداق بھارت نے برادر اسلامی ملک سعودی عرب کے حوالے سے شوشہ چھوڑا اور پروپیگنڈا کیا کہ سعودی عرب نے پاکستان کے خلاف اظہار رائے کیاہے۔ ہماری رائے میں بھارت کا یہ پروپیگنڈا فیٹف کے صدر مارکس کلیئرکی طرف سے وضاحت آنے کے بعد خود بخود دم توڑ گیا لیکن ضرورت اس امر کی ہے کہ پاکستان دفتر خارجہ اس حوالے سے سعودی حکومت کو اعتماد میں لیکر بھارت کے سازشی عزائم اور دو برادر اسلامی ملکوں کے درمیان دوری پیدا کرنے کی اس سازش کو نہ صرف طشت از بام کرے بلکہ بھارت کو آئینہ دیکھا یاجائے کہ اس کی ریشہ دوانیاں اور سازشیں اب بری طرح ناکام ہوچکی ہیں کیونکہ عالمی برادری نے بھارت کا مکروہ ،دہشتگرداور شدت پسند چہرہ اب دیکھ لیا ہے ۔ عالمی سطح پر بھارت کے خلاف رائے بن رہی ہے کہ بھارت کے اندر ایک شدت پسند حکومت قائم ہے جو ہندوتوا کی پجاری ، مسلمانوں و دیگر اقلیتوں کے خلاف منفی اور خوفناک عزائم رکھتی ہے۔ پاکستان کا گرے لسٹ سے بلیک لسٹ کی طرف نہ جانا درحقیقت یہ پاکستان کی کامیابی کا مظہر ہے جو بھارت کے پیٹ میں بل ڈالنے کیلئے کافی ہے۔ جہاں پاکستان نے 27میں سے 21 پوائنٹس پر عملدر آمد یقینی بنایا ہے تو فروری سے پہلے ہی دیگر چھ نکات پر عملدر آمد کرکے پاکستان بالآخر فروری 2021ء میں گرے لسٹ سے نکل کر وائٹ لسٹ میں آجائے گا۔ یہ صورتحال آج سے ہی بھارت کیلئے پریشانی کا باعث بن رہی ہے کیونکہ بھارت کسی طور بھی پاکستان کو پھلتا پھولتا اور خوشحال نہیںدیکھنا چاہتا ۔اس کی تمام شیطانی چالیں نام نہاد جمہوریت اور سیکولرازم کے دعوے عالمی برادری کے سامنے حقیقت میں بے نقاب ہوچکے ہیں۔ ہماری رائے میں ان تمام حقائق کے باوجود بھارت کو بعض عالمی قوتوں کی صرف اپنے مفادات کی خاطر حمایت حاصل ہے ۔ اس جعلی اور وقتی حمایت کو بھارت پاکستان کے خلاف استعمال کرنے کی بھرپور کوشش کررہا ہے ۔ سی پیک کے حوالے سے امریکہ کی کمزوری کو نریندر مودی ٹولہ چین کارڈکے طور استعمال کرکے اپنے لئے مفادات حاصل کررہا ہے لیکن بالآخر بھارت کے جھوٹ کا یہ مکروہ چہرہ اور مکر و فریب بے نقاب ہونے پر بھارت کو مزید ہزیمت اور رسوائی اٹھانا پڑے گی۔

About Aziz

Check Also

پرامن افغانستان بلاشبہ خطے کے امن اور خوشحالی کی ضمانت ہے

اگلے روز آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ سے چیئرمین افغان حزب وحدت اسلامی محمد …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *