بریکنگ نیوز

گلگت بلتستان ریاست جموں کشمیر کا حصہ تھا’ ہے اور ہمیشہ رہے گا’ یعقوب خان

رالاکوٹ :آزادکشمیرکے سابق صدرسابق وزیراعظم اورپاکستان پیپلزپارٹی آزادکشمیرکے مرکزی قائدمحمدیعقوب خان نے کہاہے کہ برائے مہربانی اداروں کے ذمہ داران گلگت بلتستان کو صوبہ بنانے سے روکیں نہیں تو اوورسیز میں بیٹھے ہوئے بیس لاکھ کشمیری احتجاج شروع کر دیں گے۔ گلگت بلتستان ریاست جموں کشمیر کا حصہ تھا، اب بھی حصہ ہے اور تا قیامت رہے گا۔ میں نے اپنے دور حکومت میں ان علاقوں کو حقوق دینے واضح پیش کش کی تھی۔ کہ میری جگہ صدر ریاست کا عہدہ یہاں کے کسی آدمی کو دیا جائے۔ صدیوں قبل گلگت سے تعلق رکھنے والا یوسف شاہ چک ریاست کشمیر کا حکمران تھا۔ اس کا مطلب ہے کہ صدیوں پہلے یہ علاقے ریاست کا حصہ تھے۔ میں پہلا صدر تھا جو ستر سالوں میں گلگت گیا اور وہاں آزاد کشمیر کے جھنڈے لگے۔ گلگت بلتستان کے طلباء و طالبات کے لیے آزاد کشمیر کے میڈیکل کالجز اور یونیورسٹیوں میں کوٹہ بڑھایا۔ میں پی ٹی آئی میں نہیں جا رہا۔ یہ سب افواہیں ہیں۔ عمران خان اور فاروق حیدر کا طرز حکومت مایوس کن ہے ۔ میرپور کی آج کی حالت دیکھ کر ترس آتا ہے۔ بہت جلدوزیرخارجہ پاکستان سے ملاقات کرکے ان سے پاکستان کی جانب سے نے تیارکیے گئے نقشے اورشاہراہ کشمیرکے نام کی تبدیلی کے حوالے سے بات کریں گے
۔اس کے بعدمیں اپناموقف عوام کے سامنے لائوں گا، انہوںنے کہاکہ پونچھ میڈیکل کالج کا منصوبہ اور راولاکوٹ بگ سٹی کی منظوری جن حالات میں میں نے لی وہ میں ہی جانتا ہوں،لیکن افسوس کے میری حکومت ختم ہونے کے بعد بجائے اس کے کہ کالج کی عمارت تعمیر کی جاتی اور اسے نارمل میزانیہ پر لایا جاتا اس کو ختم کرنے کی سازشیں ہو رہی ہیں ایسا ہوا تو فاروق حیدر ذمہ دار ہو گا ۔ہندوستان کے وزیراعظم نریندرامودی کے اقدامات سے ہندوستان اپنے دفاع میں چلاگیاہے ۔انہوں نے کہاکہ اہماری جدوجہد کامقصدنوجوان نسل کوایک پیغام دیناہے اوران کوبتاناہے کہ 1947ء کوکشمیریوں نے جوراہ متعین کی تھی اس پراہم سب چل کرہی کشمیرکی آزادی کوممکن بناسکتے ہیں۔انہوں نے کہاکہ وہ وقت دورنہیں کہ ایک مرتبہ پھرکشمیرمیں غازی ملت اورکیپٹن حسین خان شہیدجیسی قیادت دوبارہ پیداہوگی انہوں نے کہاکہ بھارت وزیراعظم کوجومرضی ہے وہ کریں ہم اس کامنہ توڑجواب دینے کوتیارہیں انہوں نے کہاکہ ہرسال پاکستانی قوم پانچ فروری کوکشمیریوں سے اظہاریکجہتی کرتی ہے ۔اس مرتبہ چودہ اگست کوپاکستان کے یوم آزادی کے موقع پرکشمیری عوام پاکستان سے اظہاریکجہتی کیا ۔محمد یعقوب خان نے وزیراعظم آزادکشمیرپرزوردیاکہ وہ موجودہ حالات میں اپنی پالیسی واضح کریں انہیں چاہیے کہ وہ آزادکشمیرکے تمام سابق صدوراورسابق وزراء اعظم سے مشاورت کرکے بدلتے ہوئے حالات میں مشترکہ لائحہ عمل طے کریں۔انہوں نے کہاکہ پاکستان ہرمقام پراوراقوام متحدہ میں جاکرکشمیرکی بات کرتاہے توکشمیریوں کوبھی نہ صرف پاکستان کی حمایت کرنی چاہیے بلکہ ہم سب کومل کرپاکستان کے خلاف سازشیں کرنے والوں کوبے نقاب کرناچاہیے اوران لوگوں کی حوصلہ شکنی کرنی چاہیے یہ ہم اتحادواتفاق سے ہی کرسکتے ہیں۔۔انہوں نے کہاکہ میں نے ماضی میں بھی پاکستانی قیادت کواپنی الیکشن مہم میں نہیں بلایاحالانکہ ایک مرتبہ یوسف رضاگیلانی میری انتخابی مہم میں آناچاہتے تھے مگرمیں نے ان کوروک دیاتھااورآئندہ بھی میں خودان کے پاس جائوں گاکسی کاسہارالے کرانتخابی مہم نہیں چلائوں گاعوام میرے ساتھ ہیں میں اکیلاہی مخالفین کے لئے الیکشن مہم کے لئے کافی ہوں۔انہوں نے کہاکہ بہت جلدوزیرخارجہ پاکستان سے ملاقات کرکے ان سے پاکستان کی جانب سے نے تیارکیے گئے نقشے اورشاہراہ کشمیرکے نام کی تبدیلی کے حوالے سے بات کریں گے ۔اس کے بعدمیں اپناموقف عوام کے سامنے لائوں گا۔

About admin

Check Also

مقبوضہ کشمیر کے عوام دنیا کی سب سے بڑی دہشتگردی کا مقابلہ کررہے ہیں،راجہ فاروق حیدر

اسلام آباد(بیورو رپورٹ)وزیر اعظم آزادجموں وکشمیر راجہ محمد فاروق حیدرخان نے کہا ہے کہ مقبوضہ …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *