بریکنگ نیوز

حکومت آئین ، جمہوری پارلیمانی عمل کو ہر پہلو سے تباہ کر رہی ہے،لیاقت بلوچ

لاہور :ک ادارہ کی آئینی مدت کم کی جائے گی تو قومی اور صوبائی اسمبلیوں کے قبل از وقت انتخابات کا راستہ بھی کھل جائے گا ۔ عمران خان سرکار آئین ، جمہوری پارلیمانی عمل کو ہر ہر پہلو سے تباہ کر رہی ہے ۔ حکومت آرڈیننس کے ذریعے یکطرفہ طور پر کوئی فیصلہ نہیں کر سکتی ایسا فیصلہ سیاسی جمہوری انتخابی بحران کو اور گھمبیر بنا دے گا ۔ حکومت گڈ گورننس دینے اور اپنی غلطیوں کی اصلاح کی بجائے نئی سے نئی غلطیاں کر رہی ہے ۔ آخر سرپرست بھی کب تک سرپرستی قائم رکھیں گے ۔ لیاقت بلوچ نے کبیر والہ کے سینئر صحافی فیاض اسلم چوہدری کی نماز جنازہ کے بعد صحافیوں اور سیاسی قائدین و کارکنان سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ 16 دسمبر سقوط مشرقی پاکستان ہماری تاریخ کا سیاہ اور المناک باب ہے ۔ فوجی آمریت نے انتخابات اقتدار کی منتقلی اور قومی وحدت کو مارشل لائی طاقت سے توڑ پھوڑ دیا اور شیخ مجیب الرحمان ، ذوالفقار علی بھٹو اقتدار کی ہوس میں ہر بربادی کی راہ پر چل دئیے ۔ غیر جانبدارانہ انتخابات میں ناکامی کے بعد انتخابی نتائج کو تسلیم نہ کیا گیا ۔ 16 دسمبر کا اصل درس یہ ہی ہے کہ دو قومی نظریہ ، آئین قانون کی بالا دستی اور شفاف غیر جانبدارانہ انتخابات کو یقینی بنایا جائے ۔ اقتدار اور شخصیات مستقل آمر نہیں ہیں جمہوری آئینی پارلیمانی اقدار کو ہی مضبوط کیا جائے ۔ لیاقت بلوچ نے ایک سوال کے جواب میں کہا کہ آرمی پبلک سکول کے سانحہ میں قوم کے نونہالوں اور پھولوں کو دہشت گردوں نے موت کی نیند سلا دیا ۔ اتنے بڑے سانحہ پر مجرموں کو سزا نہ ملی ایک طرف دہشت گردوں نے سکول تباہ کیا دوسری طرف حکومتی دہشت گردی پورے نظام تعلیم اور نئی نسل کی تعلیم کو تباہ کر رہی ہے ۔ آرمی پبلک سکول میں دہشت گردی کے ہر ایکٹر کو سزا دی جائے حکومت طلبہ و طالبات کو تعلیم سے محروم رکھنے کی حکمت عملی پر نظر ثانی کرے ۔

About Aziz

Check Also

چیئرمین کے سوا کوئی ایک شخص بتائیں جو نیب کی تعریف کرتا ہو،سپریم کورٹ

اسلام آباد(صباح نیوز)سپریم کورٹ نے جعلی اکائونٹس کیس میں ضمانت کی درخواست پر ریمارکس د …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *